Thursday, January 27, 2011

مودی نے جو کچھ کیا ہے دنیا انہیں کبھی معاف نہیں کرے گی: مولٰنا وستانوی


دیو بند: گجرات کے وزیر اعلیٰ نریندر مودی کی مدح سرائی کر کے تنازعہ کا شکار ہوکر مستعفی ہونے والے دارالعلوم دیو بند کے نو منتخب مہتمم مولٰنا غلام محمد وستانوی نے کہا کہ وہ استعفیٰ دے کر مسرت محسوس کر رہے ہیں اور انپر استعفیٰ دینے کا کوئی دباﺅ نہیں تھا نیز انہیں مودی کے بارے میں اپنے خیالات پر کوئی افسوس یا پشیمانی نہیںہے۔ تاہم مودی نے جو کچھ بھی کیا ہے اس کے لئے دنیا انہیں معاف نہیں کرے گی۔ نو منتخب و نو مستعفی مہتمم نے کہا کہ گجرات کے لوگ مودی کی اس لئے تعریف کرتے ہیں کیونکہ وہاں جو بھی ترقی ہوئی ہے مودی کا اس میں ہاتھ ہے۔ گجرات میں زبردست ترقی ہو رہی ہے اور ریاست کے ہندو مسلم مل جل کر رہتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ان کے بیان کا مقصد ہر گز یہ نہیں تھا کہ انہوں نے مودی کو معا ف کر دیا ہے یا مودی بہت نیک انسان ہے۔ انہوں نے جو کچھ کیا ہے دنیا اس کے لئے انہیں کبھی معاف نہیں کرے گی اس لئے وہ کچھ کہنے والے یا مودی کو کلین چٹ دینے والے کون ہوتے ہیں۔دارالعلوم کے نائب مہتمم مولانا عبدالخالق مدراسی نے کہا کہبڑے افسوس کی بات ہے کہ انہیں ادارے میں کام کرنے کی اجازت نہیں دی گئی جبکہ ان کے اثر و رسوخ اور وسائل سے دارالعلوم کو فیض ہی پہنچتا۔انہوں نے مزید کہا کہ مولانا وستانوی نے جو بیان دیا تھا وہ مودی کی تعریف میں نہیںبلکہ گجرات کی ترقی کے بارے میں تھا جس کو ذکر اخبارات میں بھی ہوتا ہے اور انہوں نے جو کچھ بھی کہا وہ انہوں نے دارالعلوم کے مہتمم کی حیثیت سے نہیں بلکہ ایک گجراتی ہونے کے ناطے کہا تھا۔مولانا وستانوی نے کہا کہ دارالعلوم ان سے کہیں زیادہ بڑا ہے اور وہ اس ادارے سے برتر نہیںہیں اس لئے طلبا کی ناراضگی و عنادکے سبب انہوں نے مستعفی ہوجانا ہی بہتر محسوس کیا۔
Read In English

0 comments:

Post a Comment