Thursday, January 27, 2011

حکومت ایک ہفتہ میں کالا دھن رکھنے والوں کے خلاف کارروائی کی رپورٹ دے: سپریم کورٹ


نئی دہلی : سپریم کورٹ نے اس تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ،کہ غیر ملکی بینکوں میں جمع کالا دھن اسلحہ سودوں، منشیات کے دھندے اور اسمگلنگ کے ذریعہ جمع کیا گیا ہوگا ،حکومت سے کہا کہ اس نے ان افراد یا فرموں کے خلاف کیا کارروائی کی جن کے غیر ملکی بینکوں میں کھاتے ہیں۔جسٹس بی سدرشن کی سربراہی میں معاملے کی سماعت کرنے والی بنچ نے حکومت کو ہدایت کی کہ اگلی جمعرات تک وہ اپنا جواب داخل کر دے۔عدالت عظمیٰ نے حکومت کے علاوہ ریزرو بینک آف انڈیا اور سی وی سی کو بھی ہدایت کی کہ وہ بھی جمعرات تک جواب داخل کر دیں۔ سپریم کورٹ نے یہ احکام اس عذر داری پر جاری کئے جس میں عدالت سے استدعا کی گئی تھی کہ حکومت کو ہدایت کی جائے کہ وہ کرپشن پر اقوام متحدہ کی قرار داد پر عمل کرے جس سے غیر ملکی بینکوں سے کالا دھن ملک میں واپس لانے میں مدد مل سکے گی۔حکومت سے یہ کہتے ہوئے کہ وہ اپنی جانچ کا دائرہ ٹیکس چوری کی حد تک رکھنے کے بجائے کالے دھن کے وسائل کا سراغ لگائے۔بنچ نے کہا کہ عدالت یہ جاننا چاہتی ہے کہ حکومت نے غیر ملکی بینکوں میں اتنی کثیر دولت جمع کرنے والے لوگوں کےخلاف کیا کاررواائی کی اور انہوں نے کن ذرائع سے یہ دولت جمع کی۔عدالت نے کہا کہ یہ لوگ قانون کے پابند ہیں اور ان یہ معلوم ہو جانے کے بعد کہ ان لوگوں کی غیر ملکی بینکوں میں بے تحاشہ دولت جمع ہے حکومت نے ان کے خلاف کیا اقدام کیے۔
Read In English

For news in Urdu visit our page : Latest News, Urdu News

0 comments:

Post a Comment